• دہشت گردی کیخلاف جنگ ہم نے اپنی اگلی نسل کیلئے جیتنی ہے، وفاقی وزیر داخلہ
  • روسی پارلیمنٹ نے صدارتی انتخابات کے انعقاد کی قراردادمنظورکرلی
  • شمالی کوریائی بحران پرڈونلڈ ٹرمپ کی روس پر تنقید
  • دنیا کی کوئی حکومت یا ملک ہر فرد کو سرکاری ملازمت نہیں دے سکتا، راجہ محمد فاروق حیدر
  • عمران خان کی تھیوری خود انہیں اور نہ کسی اور کو سمجھ آتی ہے، آغا سراج درانی
  • جو لوگ سمجھتے ہیں ایم کیو ایم کا وجود ختم ہوچکاان کو الیکشن میں بڑا دھچکا لگے گا، ڈاکٹر فاروق ستار
  • رکز یا صوبے کی حکومتوں کو حدود کراس نہیں کرنا چاہئیں، خواجہ سعد رفیق
  • پاکستان رینجرز پنجاب کے پنجاب پولیس کے ہمراہ خفیہ اطلاعات کی بنیاد پر سرگودھا اور بھکر میں آپریشنز
  • میاں صاحب نے پارلیمنٹ کو اتفاق فاؤنڈری بنادیا، بلاول بھٹو
  • پیپلز پارٹی کی 27دسمبرکو بینظیر بھٹو کی برسی پر اسپیشل پروازیں چلانے کیلئے درخواست

جس دن اس (سونے، چاندی اور مال) پر دوزخ کی آگ میں تاپ دی جائے گی پھر اس (تپے ہوئے مال) سے ان کی پیشانیاں اور ان کے پہلو اور ان کی پیٹھیں داغی جائیں گی.(سورۃ التوبۃ)آیت نمبر 35

وزٹ ویزوں پر یورپ پہنچانے والا اسمگلروں کا بھارتی گروہ گرفتار
Atrrest

پیرس(نیوز ڈیسک) فرانس اور جرمنی کی پولیس نے ایک مشترکہ کارروائی کرتے ہوئے انسانوں کی اسمگلنگ کرنے والے ایک گروہ کے متعدد ارکان گرفتار کر لیے ۔ گروہ کے تمام افراد کا تعلق بھارت سے ہے اور وہ ویزٹ ویزے لگوا کر لوگوں کو یورپ لا رہے تھے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق انسانوں کی اسمگلنگ میں ملوث ایک گروہ سے تعلق رکھنے والے چھ افراد کو پیرس اور اس کے نواحی علاقوں میں مارے گئے چھاپوں کے دوران گرفتار کیا گیا۔ فرانسیسی اور جرمن پولیس کے مطابق فرانس سے گرفتار کیے گئے انسانوں کے سبھی مبینہ اسمگلروں کا تعلق بھارت سے ہے۔یہ لوگ بھارتی شہریوں کو جعلی دستاویزات کی مدد سے وزٹ ویزے پر کسی یورپی ملک میں لے آتے تھے اور پھر انہیں شینگن زون کے کسی دوسرے ملک میں منتقل کر کے انہیں غیرقانونی طور پر روزگار کے مواقع بھی فراہم کرتے تھے۔ایسی ہی جعلی دستاویزات کی مدد سے ان اسمگلروں نے بھارت سے تعلق رکھنے واگے آٹھ خاندانوں کو فرانس کے سیاحتی ویزے لگوا کر بلایا اور بعد ازاں انہیں جرمن شہر ڈریسڈن منتقل کر دیا۔ ان بھارتی خاندانوں کو ڈریسڈن میں نوکریاں بھی مہیا کی گئی تھیں۔پیرس اور اس کے نواحی علاقوں میں آج مارے گئے چھاپوں کے دوران چھ اسمگلروں کی گرفتاری کے فوری بعد ڈریسڈن میں مقیم آٹھ بھارتی خاندانوں سے تعلق رکھنے والے سبھی افراد کو بھی گرفتار کر لیا گیا۔ اس کارروائی میں یوروپول نے بھی حصہ لیا۔

مزید خبریں