• پاکستان کا کابل میں دو مساجد میں ہونے والے خودکش حملوں کے نتیجے میں انسانی جانی نقصان پر دکھ اور افسوس کا اظہار
  • مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیں اتارے جانے کے دن 27 اکتوبر کو ملک بھر میں یوم سیاہ کے طور پر منایا جائیگا
  • سری لنکن ٹیم پر حملہ پولیس کی سستی کی وجہ سے ہوا تھا‘ آئی جی پنجاب
  • پی سی بی کا اسپاٹ فکسنگ کی پیشکش کامعاملہ آئی سی سی کے سپرد
  • میانمار حکومت روہنگیا مسلمانوں کو مظالم سے بچانے میں ناکام رہی، اقوام متحدہ
  • ایران ایٹمی ڈیل کی خلاف ورزی نہیں کر رہا، آئی اے ای اے
  • وزیر اعظم سے ترکی کے وزیر توانائی وقومی وسائل بیرت البیراک کی ملاقات
  • امریکی وزیرخارجہ کا غیر ملکی دورے کا آغاز ٗ پاکستان کا دورہ بھی کریں گے
  • بھارت نے پاکستان سے کلبھوشن کے معاملے پر نظر ثانی کا مطالبہ کردیا
  • سعودی ولی عہد نے ذاتی جیب سے حائل کیلئے 50لاکھ ریال عطیہ کردیئے

جس دن اس (سونے، چاندی اور مال) پر دوزخ کی آگ میں تاپ دی جائے گی پھر اس (تپے ہوئے مال) سے ان کی پیشانیاں اور ان کے پہلو اور ان کی پیٹھیں داغی جائیں گی.(سورۃ التوبۃ)آیت نمبر 35

انگریز کے بعد کالے سانپ نے ملک میں تسلط قائم کررکھا ہے، میاں رضا ربانی
Raza rabbani

کراچی (نیوز ڈیسک) چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہا ہے کہ انگریز کے بعد کالے سانپ نے ملک میں تسلط قائم کررکھا ہے۔ کالے سانپ نے مزدوروں کا استحصال کیا اور حقوق غصب کیے ہیں۔ جمہوریت میں جاگیردار اور وڈیروں کا تسلط بڑھ گیاہے جس کی وجہ سے ہم جیسا غریب الیکشن بھی لڑ نہیں سکتاہے۔ دہشتگردی اور تشدد کی سوچ تعلیمی اداروں میں پرانی روایات کو دوبارہ بحال کرنے سے ختم ہونگی۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کو گلشن معمار میں پائلر کے زیر اہتمام منعقدہ سندھ لیبر کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ میاں رضا ربانی نے کہا کہ یہ درست ہے کہ ہم ایک آزاد قوم اور خود مختار ریاست ہیں لیکن اس وقت صورت حال یہ ہے کہ پاکستان میں مزدور کا بچہ بچہ مقروض ہے۔ انگریزوں کے بعد کالے سانپ نے ملک میں تسلط قائم کررکھا ہے۔ کالے سانپ نے انتہاپسند جماعتوں، وزیروں اور سرمایہ داروں سے اتحاد کرکے اس تسلط کو برقرار رکھاہے۔ اس کالے سانپ نے مزدورں کا استحصال کیااور حقوق غصب کئے اور اب اس نے بین االاقوامی سامراج سے تعلقات بھی بنالیے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جنرل ضیا کے دور میں سب سے پہلے طلبہ تنظیموں پر پابندی عائدکی گئی۔ آج وہی سوچ طلبہ تنظیموں سے پابندی ہٹانے نہیں دیتی ہے۔ سینیٹ کی قائمہ کمیٹی طلبہ تنظیموں سے پابندی ختم کرنے کے لیے قانو ن کا جائزہ لے رہی ہے۔

مزید خبریں