ملک بھر میں سونا 150روپے فی تولہ مہنگا              نواز شریف کی درخواست ضمانت پر نیب سمیت فریقین کو نوٹسز جاری،ہفتے میں رپورٹ طلب              قیادت کےخلاف نیب کی متوقع کارروائیاں ،پیپلز پارٹی کا حکومت کے خلاف تحریک چلانے کا فیصلہ              بلاول بھٹو زرداری کا وفاقی حکومت پر قتل کی دھمکیوں کا الزام              سندھ ہائی کورٹ نے سابق صدر اور فریال تالپور کی ضمانت قبل از گرفتاری منظور کرلی              آصف زرداری نے نیب کا کال اپ نوٹس چیلنج کر دیا              بلاول کا نیب میں پیش ہونے کافیصلہ              پیرا گون ہاﺅسنگ کیس:خواجہ برادران کے ریمانڈ میں توسیع              وزیر خزانہ اسد عمر نے اپوزیشن کاالیکشن میں کالعدم تنظیموں کی حمایت لینے کا الزام مستردکردیا              سرکاری درس گاہوں میں 12ویں تک نیا نصاب پڑھانے کا فیصلہ       
تازہ تر ین

حکومت چین کے ساتھ تجارت کا توازن بہتر کرنے پر زیادہ توجہ دے ، احمد حسن مغل

اسلام آباد (ویب ڈیسک) اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر احمد حسن مغل نے کہا کہ تجارتی خسارہ کم کرنے کیلئے حکومت چین کے ساتھ تجارت کا توازن بہتر کرنے پر زیادہ توجہ دے کیونکہ چین کے ساتھ پاکستان کو تقریبا دس ارب ڈالر سے زائد تجارتی خسارے کا سامنا ہے جس کو کم کرنے کا واحد بہتر طریقہ چین کے ساتھ تجارت کو زیادہ فروغ دینا ہے۔

احمد حسن مغل نے کہا کہ حکومت چین کے ساتھ آزاد تجارتی معاہدے پر نظرثانی کر رہی ہے لہذا ضرورت اس بات کی ہے کہ نیا معاہدہ طے کرتے وقت حکومت اس بات کو یقینی بنائے کہ چین پاکستان سے اپنی درآمدات بڑھانے کی زیادہ کوشش کرے۔ انہوں نے کہا کہ چین امریکہ کے بعد دنیا میں درآمدات کرنے والا دوسرا بڑا ملک ہے اور 2017میں چین کی درآمدات 1.7کھرب ڈالر تھیں۔ انہوں نے کہا کہ چین خام اشیاء زیادہ تر لاطینی امریکہ اور افریکہ سے درآمد کرتا ہے جبکہ پاکستان کی برآمدات زیادہ تر خام مال پر مشتمل ہوتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چین اگر پاکستان سے اپنی درآمدات کو بڑھانے کی کوشش کرے تو پاکستان کی برآمدات میں اربوں ڈالر کا اضافہ ہو سکتا ہے۔

لہذا ضرورت اس بات کی ہے کہ موجودہ حکومت چین کو اس بات پر قائل کرنے کی کوشش کرے کہ وہ پاکستان سے زیادہ چیزیں درآمد کرنے پر توجہ دے جس سے پاکستان کا تجارتی خسارہ کافی حد تک کم ہو گا اور زرمبادلہ کے ذخائر میں نمایاں بہتری آئے گی۔اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سینئر نائب صدر رافعت فرید اور نائب صدر افتخار انور سیٹھی نے کہا کہ پاکستان چین کو زیادہ تر کپاس اور چاول سمیت چند اشیاء برآمد کرتا ہے حالانکہ پاکستان چین کو زرعی مصنوعات، کھیلوں کا سامان، ٹیکسٹائل مصنوعات، آلات جراحی اور چمڑے کی مصنوعات سمیت متعدد دیگر اشیاء برآمد کرنے کی عمدہ صلاحیت رکھتا ہے لہذا انہوں نے حکومت پر زور دیا کہ وہ چین کے ساتھ نظرثانی شدہ آزاد تجارت کا معاہدہ طے کرتے چین کے ساتھ تجارت کا توازن بہتر بنانے کو یقینی بنائے تا کہ پاکستان کی معیشت مشکلات سے نکل کر بہتری کی طرف گامزن ہو سکے۔ انہوں نے کہا کہ دوست ممالک سے نرم شرائط پر قرضے اور مالی امداد لینے کی بجائے اگر حکومت ان ممالک کے ساتھ پاکستان کی تجارت کو فروغ دینے کیلئے کوششیں تیز کرے تو اس سے ہماری معیشت کیلئے زیادہ فائدہ مند نتائج برآمد ہوں گے۔

مزید خبر یں

کراچی (نیوز ڈیسک)پاکستان اسٹاک مارکیٹ گذشتہ ہفتے مجموعی طور پر مندی کی لپیٹ میں رہی ،کے ایس ای100انڈیکس600پوائنٹس گھٹ گیا جس سے انڈیکس 38900پوائنٹس سے کم ہو کر38300پوائنٹس کی کم سطح پر بند ہوا ،مندی کے سبب مارکیٹ میں سرمایہ کاروں کے1کھرب12ارب روپے سے زائدڈوب گئے ... تفصیل

کراچی(نیوز ڈیسک)اسٹیٹ بینک کے اعدادو شمار کے مطابق رواں مالی سال کے پہلے 7 ماہ میں غیرملکی سرمایہ کاروں نے اسٹاک مارکیٹ سے 40 کروڑ 89 لاکھ ڈالر کا سرمایہ نکال لیا، جب کہ گزشتہ مالی سال کے مقابلے میں رواں سال جولائی تا جنوری مجموعی ... تفصیل

کراچی(نیوزڈیسک)مقامی کاٹن مارکیٹ میں گزشتہ ہفتہ کے دوران ٹیکسٹائل و اسپننگ ملز نے روئی کی خریداری بڑھادی ہے جبکہ جنرز نے بھی اسٹاک میں رکھی ہوئی روئی فروخت کرنا شروع کردی جس کے باعث کاروباری حجم میں نسبتاً اضافہ ہوگیا جبکہ روئی کے بھاﺅ میں بھی ... تفصیل