آصف زرداری نے نیب کا کال اپ نوٹس چیلنج کر دیا              بلاول کا نیب میں پیش ہونے کافیصلہ              پیرا گون ہاﺅسنگ کیس:خواجہ برادران کے ریمانڈ میں توسیع              وزیر خزانہ اسد عمر نے اپوزیشن کاالیکشن میں کالعدم تنظیموں کی حمایت لینے کا الزام مستردکردیا              سرکاری درس گاہوں میں 12ویں تک نیا نصاب پڑھانے کا فیصلہ       
تازہ تر ین

پاکستان میں طبقاتی فرق کے حوالے سے ورلڈ بنک کی رپورٹ چشم کشاہے ‘امیر العظیم

world bank

لاہور(ویب ڈیسک )امیرجماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب امیر العظیم نے پاکستان میں طبقاتی فرق کے حوالے سے ورلڈبنک کی تازہ رپورٹ کوتشویشناک قراردیتے ہوئے کہاہے کہ حکمرانوں کی ناکام معاشی پالیسیوں کی بدولت ملک میں امیر اور غریب کے درمیان طبقاتی فرق میں اضافہ تشویش ناک اور لمحہ فکریہ ہے۔

ورلڈ بنک کی رپورٹ سے ظاہر ہوتاہے کہ حکمرانوں کے پاس کسی قسم کی کوئی معاشی پالیسی نہیں۔رپورٹ کے مطابق بلوچستان کی62فیصد،سندھ کی30،پنجاب کی13اور خیبرپختونخواہ کی15فیصد آباد ی خط غربت سے نیچے زندگی گزارنے پر مجبور ہے جبکہ اس حوالے سے حکومتی اقدامات غیر تسلی بخش ہیں۔انہوں نے کہاکہ ایک طرف وزیر خزانہ کہتے ہیں کہ12ارب ڈالر کی فوری امداد سے معاشی بحران ٹل چکا ہے اور آئی ایم ایف کے پاس جانے کی ضرورت نہیں دوسری طرف آئی ایم ایف کے حکام کے ساتھ قرض حاصل کرنے کے لیے مذاکرات کیے جارہے ہیں۔آئی ایم ایف کی سخت ترین شرائط پر قرض حاصل کرنے سے ملک میں مہنگائی کانیاطوفان آئے گا۔عوام کی زندگی پہلے ہی شدید مشکلات کاشکار ہے،موجودہ حکومت کی ناقص پالیسیوں کی بدولت ان میں اوراضافہ ہورہاہے۔انہوں نے کہاکہ عوام کوریلیف فراہم کرنے کے لیے حکومت فوری طورپر ایک بڑے ریلیف پیکیج کااعلان کرے ۔دکھاوے کے اقدامات اور محض بیانات سے کچھ نہیں ہوگا۔عوام نے تبدیلی کے لیے موجودہ حکومت کوووٹ دیا ہے۔عمران خان نے تبدیلی کاجونعرہ لگایاتھا اسے پوراکریں۔

انہوں نے کہاکہ آئی ایم ایف کی شرائط پر اگر من وعن عمل درآمد کیاجاتاہے تو ایک محتاط اندازے کے مطابق ملک میں اشیائے خوردونوش،بجلی وگیس اور پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 15سے20فیصد تک مزید اضافہ ہوگا۔تین ماہ کے دوران بڑھنے والی مہنگائی نے عوام کاجینا دوبھرکردیا ہے۔امیر العظیم نے مزیدکہاکہ ملکی صنعت بدترین صورتحال کاشکار ہے۔بڑے تعمیراتی منصوبوں پر کام ٹھپ پڑاہے جس سے ان کے ساتھ جڑی چھوٹی صنعتوں میں بھی مسائل جنم لے رہے ہیں۔چھوٹے صنعت کار مالی بحران کاشکارہوکر بیرون ملک کا رخ کررہے ہیں۔اگر سرمایہ کاروں کی بیرون ملک منتقلی کاسلسلہ نہ روکاگیاتو حالات مزید گھمبیر ہوسکتے ہیں۔

مزید خبر یں

کراچی (نیوز ڈیسک)پاکستان اسٹاک مارکیٹ گذشتہ ہفتے مجموعی طور پر مندی کی لپیٹ میں رہی ،کے ایس ای100انڈیکس600پوائنٹس گھٹ گیا جس سے انڈیکس 38900پوائنٹس سے کم ہو کر38300پوائنٹس کی کم سطح پر بند ہوا ،مندی کے سبب مارکیٹ میں سرمایہ کاروں کے1کھرب12ارب روپے سے زائدڈوب گئے ... تفصیل

کراچی(نیوز ڈیسک)اسٹیٹ بینک کے اعدادو شمار کے مطابق رواں مالی سال کے پہلے 7 ماہ میں غیرملکی سرمایہ کاروں نے اسٹاک مارکیٹ سے 40 کروڑ 89 لاکھ ڈالر کا سرمایہ نکال لیا، جب کہ گزشتہ مالی سال کے مقابلے میں رواں سال جولائی تا جنوری مجموعی ... تفصیل

کراچی(نیوزڈیسک)مقامی کاٹن مارکیٹ میں گزشتہ ہفتہ کے دوران ٹیکسٹائل و اسپننگ ملز نے روئی کی خریداری بڑھادی ہے جبکہ جنرز نے بھی اسٹاک میں رکھی ہوئی روئی فروخت کرنا شروع کردی جس کے باعث کاروباری حجم میں نسبتاً اضافہ ہوگیا جبکہ روئی کے بھاﺅ میں بھی ... تفصیل