ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان کو قدرتی آفات سے بچاوکیلئے 15 کروڑ روپے کی گرانٹ فراہم کردی              بلاول بھٹو کوغداروطن قراردینے کے مطالبے کی قرارداد جمع              مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی فائرنگ سے بچے سمیت 7 کشمیری شہید              مريم نواز کی کل جيل کے باہر دھرنا دينے کی دھمکی              کر اچی:مفتی تقی عثمانی کے قافلے پر فائرنگ ،2افراد جاں بحق              پاکستان پیپلز پارٹی کا نیشنل ایکشن پلان پر حکومتی بریفنگ کے بائیکاٹ کا فیصلہ              اٹک میں گھر کی چھت گرنے سے 6افراد جا ں بحق       
تازہ تر ین

ایک ارب ڈالر کی سعودی امداد پیر تک تک پہنچ جائے گی ٗوزیر خزانہ اسد عمر

Asad Umer

اسلام آباد (ویب ڈیسک)پاکستان سعودی عرب سے امداد کی مد میں ایک ارب ڈالر کی رقم پیر تک حاصل کرلے گاجس سے ملک کے غیر ملکی زر مبادلہ میں اضافہ ہوگا۔وزیر خزانہ اسد عمر نے ایک انٹرویو میں بتایا کہ رقم اسٹیٹ بینک آف پاکستان میں پیر 19 نومبر تک پہنچ جائیگی۔انہوں نے کہاکہ مجھے میرے سعودی ہم منصب نے اس بات کی یقین دہانی کرائی ہے ٗامداد کا دوسرا اور تیسرا حصہ اگلے 2 ماہ میں موصول ہوگا۔وزیر خزانہ نے کہا کہ تیل کی در آمد میں تاخیری ادائیگی کی سہولت اگلے ماہ سے ملنا شروع ہوجائے گی تاہم وزیر خزانہ جنہوں نے موجودہ بیلنس آف پیمنٹ کے بحران کا اس امداد اور چین سے ملنے والی امداد سے پورا ہونے کا عندیہ دیا تھا، نے چین سے ملنے والی امداد کے حوالے سے نہیں بتایا۔انہوں نے کہاکہ یہ چین کی جانب سے ملنے والی بے مثال امداد ہے، انہوں نے وعدہ کیا کہ وہ اس کی تفصیلات کو عیاں نہیں کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ میں اس وقت تفصیلات نہیں بتاؤں گا۔انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف کے پاس جانے کی واحد وجہ ہماری معیشت میں تیزی لانا اور کسی خلا کو پر کرنے کے لیے کسی قرض کی جانب نہ جانا ہے۔انہوں نے وضاحت کی کہ وہ قرض کی شرائط پر نہیں بلکہ وسیع معاشی اصلاحات پیکج‘ پر بات کر رہے ہیں۔آئی ایم ایف کا پاکستان کیلئے فنڈنگ کوٹہ تقریباً 6 سے 6.5 ارب ڈالر کا ہے۔وزیر خزانہ نے حکومت کی پہلے سال کا ہدف بتاتے ہوئے کہا کہ حکومت کی جانب سے اخراجات کو کم کرنے کے لیے بڑے اقدامات کیے گئے ہیں ٗ ہم جون 2019 تک موجودہ خسارے کو کم کرکے 12 ارب ڈالر تک لے جائیں گے اور کمی تقریباً 7 ارب ڈالر کی ہوگی۔

انہوں نے کہاکہ آئی ایم ایف پیکج، بیلنس آف پیمنٹ کے خلا کے چھوٹے سے حصے کو پورا کرنے میں مدد دیگا۔انہوں نے بتایا کہ آئی ایم ایف سے معاونت حاصل کر کے معیشت کو سیدھی سمت لے جانے پر کوئی دو رائے نہیں ٗمسئلہ صرف بوجھ بڑھنے کا ہے۔اسد عمر نے بتایا کہ ہماری سمت واضح ہے کہ ہم بوجھ صرف زیادہ آمدن والے افراد پر ہی ڈالیں گے۔انہوں نے کہاکہ دونوں اطراف سے معاہدے کے بنیادی حقائق اور فریم ورکس کا تبادلہ ہوچکا ہے ٗمیں معاشی معاملات کے حل کیلئے آئی ایم ایف کے پیچھے نہیں چھپنا چاہوں گا۔

نجکاری کے حوالے سے انہوں نے کہاکہ آئی ایم ایف کے پاس بنیادی ڈھانچے سے متعلق اصلاحات پر دو رائے نہیں کیونکہ ان کی حکومت نے 50 سے 60 سرکاری کمپنیوں میں سے 7 کی نشاندہی کی ہے جنہیں نجکاری کی جانی ہیں۔انہوں نے کہاکہ اگر ایل این جی کمپنی کی بھی نجکاری کردی گئی تو اس کا اثر گزشتہ حکومت کے نجکاری پروگرام سے زیادہ ہوگا۔انہوں نے بتایا کہ تحریک انصاف کی حکومت پاکستان اسٹیل ملز، پاکستان ریلویز اور پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز کی نجکاری کا کوئی ارادہ نہیں رکھتی تاہم اس کے بنیادی ڈھانچے میں تبدیلی لائی جائے گی۔انہوں نے بتایا کہ حکومت نے اسٹیل ملز کی انتظامیہ کو ملز کو پوری طرح سے چلانے کے لیے 45 دن میں جامع حکمت عملی تیار کرنے کا کہا ہے۔

مزید خبر یں

لاہور(نیوز ڈیسک)لاہور چیمبر کے صدر الماس حیدر نے کہا ہے کہ ہمارا ہدف پاکستان کو عالمی کاروباری آسانیوں والے ممالک کی درجہ بندی میں محض چند درجے بہتر نہیں بلکہ اولین ممالک کی صف میں لانا ہونا چاہیے۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار ورلڈ بینک ... تفصیل

لاہور (نیوز ڈیسک) سارک چیمبر کے سینئر نائب صدر افتخار علی ملک نے کہا ہے کہ ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد کا دورہ پاکستان دونوں برادر اسلامی ممالک کے مابین معاشی تعاون اور باہمی تعلقات کے فروغ کے ضمن میں سنگ میل ثابت ہو گا۔ملائیشیا ٹریڈرز ... تفصیل

لاہور (نیوز ڈیسک) پاکستان فرنیچر کونسل کے چیف ایگزیکٹو میاں کاشف اشفاق نے ملائیشیا کے وزیراعظم ڈاکٹر مہاتیر محمد کے پاکستان کے دورے کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کا دورہ پاکستان اور ملائیشیا کے درمیان اقتصادی اور دوطرفہ تعلقات کو بڑھانے کیلئے نئی ... تفصیل