آٹا بحران سے نمٹنے کے لئے اقتصادی رابطہ کمیٹی کا بڑا فیصلہ:ای سی سی نے 3لاکھ ٹن گندم فوری درآمد کرنے کی اجازت دیدی
اسلام آباد کے دیہی علاقوں میں 79 ترقیاتی سکیموں کیلئے باضابطہ ٹینڈر جاری
گنےکےکرشنگ سیزن کےآغازپر ہی شوگرمافیا سرگرم :ملک میں چینی کی ہول سیل قیمت 69 روپے فی کلو ہو گئی
الیکشن کمیشن نے 64 اراکین قومی و صوبائی اسمبلیوں کی رکنیت بحال کر دی
نارووال سپورٹس کمپلیکس اسکینڈل:احسن اقبال کے مزید جسمانی ریمانڈ کی استدعا مسترد،جوڈیشنل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا
آئی جی سندھ کو ہٹانے کا نوٹیفکیشن سندھ ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا گیا
حکومت کا بچت اسکیموں میں 40 کھرب روپے سرمایہ کاری کی جانچ پڑتال کا فیصلہ
پنجاب حکومت نے میاں نواز شریف کی طبی رپورٹس مسترد کر دیں
تازہ تر ین

اچھی کوالٹی اور اسٹاک مال میں دلچسپی بڑھنے کی وجہ سے روئی کے بھاﺅ میں مجموعی طورپر اضافے کا رجحان

کراچی (نیوزڈیسک) مقامی کاٹن مارکیٹ میں گزشتہ ہفتہ کے دوران ٹیکسٹائل ملز کی اچھی کوالٹی اور اسٹاک مال میں دلچسپی بڑھنے کی وجہ سے روئی کے بھاﺅ میں مجموعی طورپر اضافہ کا رجحان رہا۔ جنرز چین اور امریکا کے مابین تنازع میں نرمی آنے کے بعد مارکیٹ میں تیزی آنے کی توقع رکھے ہوئے ہیں جس کی وجہ سے روئی کی فروخت میں محتاط رویہ اختیار کئے ہوئے ہیں جس کے باعث روئی کے بھاﺅ میں 200 تا 300 روپے کا اضافہ ہوا ہے۔ کاروباری حجم میں بھی نسبتا اضافہ ہو رہا ہے گو کہ بارشوں، دھند اور ٹرانسپورٹ کی ہڑتال کاروبار میں حائل ہورہی ہے۔ ایران-امریکا کی کشیدگی کی وجہ سے مارکیٹ میں بے چینی پائی جاتی ہے۔ گو کہ جنرز کے پاس روئی کا اسٹاک کم ہوتا جارہا ہے جبکہ کاشتکاروں اور زمینداروں کے پاس پھٹی کا اسٹاک بھی کم ہے۔ آئندہ دنوں میں حالات ٹھیک رہے تو مارکیٹ میں روئی کے بھاﺅ میں اضافہ کا تسلسل جاری رہے گا۔ بین الاقوامی کاٹن مارکیٹوں میں بھی تیزی کا رجحان ہے جس کے باعث مقامی ٹیکسٹائل ملز کی مقامی جنرز سے روئی کی خریداری میں دلچسپی بڑھنے لگی ہے مقامی جنرز کے پاس بمشکل 7 لاکھ گانٹھوں کا قلیل اسٹاک موجود ہے جبکہ نئی سیزن شروع ہونے میں تقریبا 7 مہینے درکار ہیں۔صوبہ سندھ میں روئی کا بھا فی من 7200 تا 9300 روپے رہا پھٹی کا بھاﺅ فی 40 کلو 2800 تا 4400 روپے رہا صوبہ پنجاب میں روئی کا بھاﺅ فی من 7500 تا 9300 روپے رہا پھٹی کا بھاﺅ فی 40 کلو 3200 تا 4600 روپے صوبہ بلوچستان میں تقریبا 4000 گانٹھوں کا قلیل اسٹاک موجود ہے جبکہ پھٹی بھی نہ ہونے کے برابر دستیاب ہے۔کراچی کاٹن ایسوسی ایشن کی اسپاٹ ریٹ کمیٹی نے اسپاٹ ریٹ میں فی من 100 روپے کا اضافہ کرکے اسپاٹ ریٹ فی من 9000 روپے کے بھاﺅ پر بند کیا۔کراچی کاٹن بروکرز فورم کے چیئرمین نسیم عثمان نے بتایا کہ بین الاقوامی کاٹن مارکیٹوں میں مجموعی طورپر تیزی کا رجحان ہے امریکا ایران کے مابین کشیدگی کے باعث بین الاقوامی کاروباری منڈیوں میں زبردست اتار چڑھا رہا چین اور امریکا کے تجارتی تنازع میں 15 جنوری سے جزوی کمی ہونے کی امید سے نیویارک کاٹن مارکیٹ میں روئی کے بھاﺅ میں تیزی کا رجحان رہا جو فی پاونڈ 71 امریکن سینٹ سے تجاوز کرگیا جو گزشتہ 8 مہینوں میں سبسے زیادہ دام بتائے جاتے ہیں علاوہ ازیں یو ایس ڈی اے کی ہفتہ وار رپورٹ میں گزشتہ ہفتہ کے نسبت 32 فیصد کم برآمد ہوئی ہے اسکا مارکیٹ نے کوئی اثر نہیں لیا ہے جس کی ایک وجہ یہ بھی بتائی جاتی ہے کہ امریکا میں روئی کی پیداوار 5 تا 7 لاکھ گانٹھیں کم ہونے کا خدشہ ہے بھارت کی روئی میں چین بنگلہ دیش اور ویتنام کی ٹیکسٹائل ملز نے دلچسپی لینا شروع کی ہے جس کے باعث روئی کے بھاﺅ میں اضافہ کا رجحان ہے گو کہ بھارت میں مقامی ٹیکسٹائل ملز کی خریداری کم ہے جس کی وجہ سے وہاں شدید بحرانی کیفیت بتائی جاتی ہے۔چین اور امریکہ کے مابین تجارتی تنازعہ کم ہونے کی خبروں کی وجہ سے روئی کے بھاﺅ میں اضافہ کا رجحان ہے بھارت کی کپاس کی درآمد میں ایشیائی ملکوں کی دلچسپی کے باعث امریکا اور برازیل کی کاٹن کے بھاﺅ پر مجموعی طور پر دباﺅ آنے کا کہا جا رہا ہے گو کہ امریکا اور برازیل نے وافر مقدار میں روئی کے برآمدی سودے کرلئے ہیں۔کپاس کی نئی سیزن کی بوائی مارچ اپریل میں شروع ہو جاتی ہے نئی سیزن کی اگوتی بوائی شروع ہونے میں صرف دو یا تین مہینے بقایا ہے۔ ہمارے کپاس کی فصل مسلسل تنزلی کا شکار ہے جس کی وجہ سے ملک کے ٹیکسٹائل سیکٹر کو ناقابل تلافی نقصان ہو رہا ہے۔ علاوہ ازیں بیرون ممالک سے وافر مقدار میں روئی کی درآمد کرنی پڑتی ہے جس کے باعث قیمتی زرمبادلہ خرچ کرنا پڑتا ہے جو ملک کی معیشت پر زبردست بوجھ ہے۔اس کے تدارک کے لیے حکومت کو ابھی سے جنگی بنیادوں پر حکمت عملی تیار کرنی پڑے گی ۔

مزید خبر یں

اسلام آباد (نیوزڈیسک) وفاقی حکومت نے ناجائز پیسے کو مالی نظام کا حصہ بننے سے روکنے اور منی لانڈرنگ سے تحفظ کےلئے 70 لاکھ سے زائد سرمایہ کاروں کی 40 کھرب 30 ارب روپے مالیت کی قومی بچت کی اسکیموں میں سرمایہ کاری کی جانچ پڑتال ... تفصیل

کراچی (نیوزڈیسک) پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گذشتہ ہفتے کاروباری اتار چڑھاﺅ کے بعد مجموعی طور پر مندی کا رجحان رہا ،کے ایس ای100انڈیکس43200پوائنٹس سے گھٹ کر43100پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ مارکیٹ میں سرمایہ کاروں کے17ارب سے زائد روپے بھی ڈوب گئے جس کی وجہ سے سرمائے ... تفصیل

کراچی (نیوزڈیسک) مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں روپے کے مقابلے ڈالر ،یورو اور برطانوی پونڈ کی قدر میں کمی کا رجحان رہا ۔فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق ہفتہ کو مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر 10پیسے گھٹ ... تفصیل

Columns

Hikayat