بلوچستان کے اسکولوں میں ناظرہ قرآن کی تعلیم لازمی قرار دینے کی منظوری
پاکستان بار کونسل کا خصوصی عدالت غیر قانونی قرار دینے پر سپریم کورٹ سے رجوع کا فیصلہ
آمدن سے زائد اثاثہ جات ریفرنس : خورشید شاہ کے ریمانڈ میں 15دن کی توسیع
اغواء میں معاونت کیس : سینیٹر سرفرازبگٹی کی ضمانت قبل ازگرفتاری کی درخواست منظور
وزیراعظم کی شہباز شریف اورمریم کی کرپشن کے شواہد منظرعام پرلانے کی ہدایت
پنجاب میں آٹے کی قیمت 64 سے بڑھ کر70 روپے فی کلوہوگئی
مشرف کیس: پاکستان بار کونسل کا لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے کو چیلنج کرنے کا اعلان
احتساب عدالت نے شہباز شریف کو حاضری سے تا حکم ثانی استثنیٰ دے دیا
تازہ تر ین

خیبر پختونخوا ہ کے مختلف اضلاع میں 6 پولیو وائرس کی تصدیق

لاہور( نیوزڈیسک) خیبر پختونخوا ہ کے مختلف اضلاع میں 6 پولیو وائرس کی تصدیق کے بعد ملک بھر میں سال 2019 کے پولیو کیسز کی تعداد 140 تک پہنچ گئی ،صرف خیبرپختونخوا ہ میں سال 2019 کے عرصے میں پولیو کے مجموعی طور پر 97 کیسز ہوگئے۔پولیو کے نئے کیس خیبرپختونخوا ہ کے 6 اضلاع خیبر، مہمند، باجوڑ، پشاور، تورغر اور لکی مروت میں سامنے آئے۔فراہم کردہ تفصیلات کے مطابق ضلع خیبر میں 18 ماہ کی بچی، ضلع مہمند میں 10 ماہ کے بچے، ضلع باجوڑ میں 7 ماہ کی بچی، ضلع پشاور میں 10 ماہ کی بچی، تورغر میں 12 ماہ کے بچے اور لکی مروت میں 18 ماہ کی بچی میں پولیو کے وائرس کی تصدیق ہوگئی۔اس ضمن میں بتایا گیا کہ ضلع پشاوراور باجوڑ میں متاثرہ بچوں کو پولیو کی ویکسین دی گئی تھی تاہم دیگراضلاع میں متاثرین بچوں کو ویکسین نہیں دی گئی۔انسداد پولیو پروگرام کے سربراہ ڈاکٹر رانا صفدر نے بتایا کہ نئے کیسز وائلڈ پولیو نہیں ہیں بلکہ سی وی ڈی پی وی ٹو کے ہیں۔سی وی ڈی پی وی ٹو کے مجموعی طور پر ب تک 18 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جبکہ پاکستان سمیت 18ممالک کو سی وی ڈی پی وی ٹو وائرس کا سامنا ہے۔ڈاکٹر رانا صفدر نے بتایا کہ اپریل 2016سے مارکیٹ سی وی ڈی پی وی ٹو وائرس کے لیے ویکسین دستیاب نہیں تاہم نئے کیسز کنڑول کے لیے حکمت عملی بنا کر گلوربل ایڈوزئری کے ساتھ شیئرکریں گے۔قومی ادارہ صحت کے عہدیدار کے مطابق سال 2020 کا آغاز ہونے کے باوجود مزید ایک ماہ تک سامنے آنے والے کیسز 2019 کی فہرست میں شامل کیے جاسکتے ہیں کیونکہ کسی سال میں پولیو کیس کا اندراج وائرس کی تصدیق ہونے کی تاریخ کے بجائے ٹیسٹ کے لیے نمونے لینے کے تاریخ سے ہوتا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ پولیو وائرس کے متحرک ہونے کے لیے کم از کم 3 ہفتوں کا وقت درکار ہوتا ہے لہٰذانمونے حاصل کرنے کے 3 ہفتوں بعد پولیو کیس کی تصدیق ہوتی ہے۔انہوں نے بتایا تھا کہ یہ عین ممکن ہے کہ آئندہ کچھ ہفتوں تک ہم 2019 کے مزید پولیو کیسز کی تصدیق کریں۔

مزید خبر یں

تھرپارکر (نیوزڈیسک) تھرپارکر میں غذائی قلت اور دیگر امراض کے باعث مزید 3 بچے انتقال کر گئے۔ذرائع کے مطابق رواں ماہ غذائی کمی اور دیگرا مراض سے اب تک 30 بچوں کا انتقال ہو چکا ہے۔خیال رہے کہ سندھ کے ضلع تھر پارکر میں خوراک اور ... تفصیل

سڈنی(نیوزڈیسک) بیکٹیریا کوکچل کر مارنے والے مقناطیسی ذرات تیار کرلئے گئے ۔تفصیلات کے مطابق آسٹریلیا کی آر ایم آئی ٹی یونیورسٹی کی ٹیم نے بیکٹیریا پر حملہ کرکے انہیں چیرپھاڑ کرنے پر تحقیق کی ہے۔ سائنس دانوں نے مقناطیسی اور دھاتی مائع کے نینو ذرات بنائے ... تفصیل

لاہور( نیوزڈیسک) پولیو کا ایک اور کیس سامنے آنے کے بعد سال 2019 کے پولیو سے متاثرہ بچوں کی تعداد 136 تک جا پہنچی۔نیشنل ایمرجنسی آپریشن سینٹر برائے پولیو کے کوارڈی نیٹر ڈاکٹر رانا صفدر نے بتایا کہ نیا کیس ضلع لکی مروت کی یونین کونسل ... تفصیل