حکومت کا سینیٹ انتخابات میں ہارس ٹریڈنگ کے خاتمے کیلئے اوپن بیلٹ کا فیصلہ
جی 20 سے پاکستان کو قرضوں کی ادائیگی میں 2 ارب ڈالر سے زائد ریلیف ملنے کا امکان
سعودی عرب میں کوڑے مارنے کی سزا کو باضابطہ ختم کردیا گیا
سٹیزن پورٹل سے شہری غیر مطمئن، وزیراعظم کا اداروں کیخلاف تحقیقات کا حکم
کورونا نے پی ٹی آئی کی رکن اسمبلی شاہین رضا کی جان لے لی
ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان کو کورونا وباء سے بچاؤ کیلئے 30 کروڑ ڈالر کا قرض فراہم کر دیا
حکومت بلوچستان نے اسمارٹ لاک ڈاؤن میں 2 جون تک توسیع کردی
پاکستان میں 2 ماہ بعد ریلوے آپریشن بحال کر دیا گیا
کرونا وبا،ملک میں 1ہزار سے زائد اموات،مریضو ں کی تعداد47ہزار سے تجاوز کر گئی،13ہزار سے زائدصحتیاب
تازہ تر ین

روزہ رکھنا پیٹ کے امراض کیلئے مفید، قوت مدافعت بڑھانے کا سبب ہے، ماہرین

کراچی(نیوزڈیسک)ماہرین امراض پیٹ اور جگر نے کہاہے کہ روزہ روزہ رکھنا نہ صرف نظام انہضام کے لیے انتہائی مفید ہے بلکہ روزہ رکھنے سے انسان میں قوت مدافعت بڑھتی ہے جوکہ اسے متعدی امراض بشمول کرونا وائرس سے لڑنے میں مدد دے سکتی ہے، مسلسل روزے رکھ کر وزن میں کمی لائی جاسکتی ہے ،روزے رکھنا دماغی صحت کے لیے بھی انتہائی مفید عمل ہے۔خیالات کا اظہار ماہرین امراض پیٹ اور جگر نے پاک جی ای اینڈ لیور ڈیز سوسائٹی(پی جی ایل ڈی ایس)کے زیر اہتمام آن لاین سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔آن لائن سیمینارسے ڈائویونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے رجسٹرار اور معروف فزیشن پروفیسر امان اللہ عباسی، لیاقت نیشنل اسپتال کی ایسوسی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر لبنی کمانی، معروف ماہر امراض پیٹ و جگر اور پی جی ایل ڈی ایس کے سرپرست اعلی ڈاکٹر شاہد احمد، سوسائٹی کے صدر ڈاکٹرسجاد جمیل، جناح اسپتال کراچی کی ڈاکٹر نازش بٹ اور ڈاکٹر حفیظ اللہ شیخ نے بھی خطاب کیا۔ڈائو یونیورسٹی کے رجسٹرار پروفیسر امان اللہ عباسی کا کہنا تھا کہ رمضان کے روزے تھے مسلمانوں کے لیے لیے انتہائی رحمت کا باعث ہے کیونکہ ان کے ذریعے اللہ تعالی انسانی جسم کے نظام انہضام کی مرمت فرماتا ہے، روزہ رکھنے سے سے انسانی جسم کی قوت مدافعت بڑھتی ہے جو اسے سے کرونا وائرس اِس سے ہونے والی انفیکشن سمیت دیگر بیماریوں سے لڑنے میں مدد دیتی ہے، روزے سے انسانی دماغی صلاحیت بہتر ہوتی ہے جبکہ یہ بھی دیکھا گیا ہے کہ کہ روزے رکھنے سے جسم میں مختلف بیماریوں کے وائرس کی تعداد کم ہوتی ہے جس کے نتیجے میں بیماریوں پر قابو پانے میں مدد ملتی ہے۔انہوں نے کہاکہ وہ روزے دار تو کسی بھی قسم کی ادویات استعمال کر رہے ہیں ہیں روزہ رکھنے سے پہلے اپنے ڈاکٹر سے مشورہ ضرور کریں اور اپنی ادویات باقاعدگی سے استعمال کریں تاکہ انہیں رمضان کے مہینے میں کسی قسم کی مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے۔ایک سوال کے جواب میں پروفیسر امان اللہ عباسی نے کہاکہ یہ خیال غلط ہے کہ روزے داروں کو قبض ہو جاتا ہے کیوں کہ روزے کی حالت میں میں انسان کا نظام انہضام بہتر طریقے سے کام کر رہا ہوتا ہے لیکن لوگوں کو چاہئے کہ وہ پھلوں سبزیوں دالوں دہی اور پانی کا استعمال زیادہ کریں جبکہ تلی ہوئی اور غیر صحت مند غذاں سے پرہیز کریں۔لیاقت نیشنل اسپتال سے وابستہ ماہر امراض پیٹ وجگر پروفیسر ڈاکٹر لبنی کمانی نے کہاکہ جگر جگر کے امراض میں مبتلا ایسے مریض جن کی بیماری ابتدائی نوعیت کی ہے وہ اپنے ڈاکٹر کے مشورے سے روزہ رکھ سکتے ہیں لیکن ایسے مریض جو ان کو ان کے ڈاکٹروں نے پشاب آور ادویات تجویز کر رکھی ہیں اور جن کو پیٹ میں پانی بھرجانے، غنودگی جیسے مسائل کا سامنا ہے انہیں روزہ رکھنے سے گریز کرنا چاہیے۔

مزید خبر یں

جنیوا (نیوزڈیسک)عالمی ادارہ صحت (WHO) نے کرونا وائرس کا مقابلہ کرنے کے لیے عالمی ممالک کے درمیان تعاون کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ اب تک دنیا بھر میں اس وبائی مرض کا شکار ہو کر 3.2 لاکھ سے زیادہ افراد اس دنیا سے رخصت ہو ... تفصیل

بیجنگ (نیوزڈیسک) چینی سائنسدانوں نے یقین کا اظہار کیا کہ کورونا وائرس کا علاج دوا سے ممکن ہو گا۔ اس وباء کیلئے ویکسین کی ضرورت نہیں ہو گی۔تفصیلات کے مطابق چین کی ایک لیبارٹری میں کورونا وائرس کے علاج کے لیے دوا تیار کی جا رہی ... تفصیل

اسلام آباد(نیوزڈیسک)معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہاہے کہ کورونا وبا پر کوئی بھی ملک اکیلے قابو نہیں پاسکتا ، عالمی ادارہ صحت کے رکن ممالک مشترکہ طور پر بہتر طریقے سے وبا سے نمٹ سکتے ہیں ،آبادی کے لحاظ سے دنیا کے پانچویں ... تفصیل