وزیر اعظم نیوز ی لینڈ کا خود کار و نیم خودکارہتھیاروں پر پابندی کا اعلان              جماعت اسلامی کا متحدہ مجلس عمل سے علیحدگی کا باضابطہ اعلان              مشال قتل کیس میں مزیددو ملزمان کو عمر قید       
تازہ تر ین

اس نے کہا کہ میں نے یہ تقسیم بھیڑیے کے انجام سے سیکھی۔ جب اس کو طمانچہ پڑا تو وہ بھاگا تھا

بھیڑیے کے انجام سےلومڑی نے سبق سیکھا

            حکایت بیان کی جاتی ہے کہ ایک مرتبہ شیر ، لومڑی اور بھیڑیا تینوں شکار کےلئے نکلے، انہوں نے ایک گدھا، ہرن اور خرگوش شکار کیا۔ شیر نے بھیڑیے سےکہا: ہمارے درمیان اس کو تقسیم کرو۔ بھیڑے نےکہا کہ : تقسیم کا معاملہ تو بالکل واضح ہے۔ کہ گدھا شیر کےلئے اور خرگوش لومڑی کےلئے اور ہرن میرے لئے۔ شیر نے اس کے سر پر طمانچہ مارا۔ پھرلومڑی سے کہا: تو ہمارے درمیان تقسیم کر۔ لومڑی نے عرض کیا تقسیم تو بالکل واضح ہے:

            کہ گدھا بادشاہ (شیر) کے ناشتہ کے لئے اور خرگوش شام کےلئے اور ہرن ان کے درمیان کےاوقات کےلئے۔ شیر نے خوش ہوکر کہا: اللہ تعالیٰ تجھے مارے (یہ جملہ اس نے پیار بھرے انداز کہا تھا) یہ تقسیم تو نے کہاں سے سیکھی۔ اس نے کہا کہ میں نے یہ تقسیم بھیڑیے کے انجام سے سیکھی۔ جب اس کو طمانچہ پڑا تو وہ بھاگا تھا۔

(علامہ شہاب الدین قلیوبیؒ)