دفترخارجہ کانیوزی لینڈ سانحے میں شہید ہونے والے 4 افراد کے ورثا کے لئے ویزہ کی سہولت کا اعلان              پیپلزپارٹی نے رابطہ عوام مہم شروع کرنے کا اعلان کردیا              سابق وفاقی وزیر کامران مائیکل پر سفری پابندی عائد              سینیٹ کمیٹی: سعودی ولی عہد کے دورہ پاکستان میں آنے والے اخراجات کی تفصیلات طلب              سانحہ نیوزی لینڈ : شہید پاکستانیوں کی تعداد 6 ہوگئی              پاک فوج نے بھارت کاجاسوس ڈرون مار گرایا              شیخ رشید کا وزیر اعظم کی جانب سے مزدوروں کےلئے تین ، تین ہزار روپے انعام کا اعلان              کرائسٹ چرچ مساجد پر حملہ کرنے والا انتہا پسند عدالت میں پیش،قتل کا الزام عائد              آصف زرداری نے میگا منی لانڈرنگ کیس کی اسلام آباد منتقلی کا فیصلہ چیلنج کردیا       
تازہ تر ین

پسند کی شادی جرم بن گئی ، پولیس نے خاتون کو گرفتارکرلیا پولیس کی جانب چونکا دینے والے انکشافات سامنے آگئے

اسلام آباد(نیو زڈیسک)بھارت کے مشہور شہرممبئی میں پولیس نے 20 سالہ خاتون کو ایک 17 سالہ لڑکے سے شادی پر گرفتار کرلیا۔بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق خاتون اپنے 17 سالہ شوہر اور 5 ماہ کی بچی کے ساتھ گزشتہ ایک روز سے پولیس کی قید میں ہے۔رپورٹ کے مطابق انہیں لڑکے کی ماں کی جانب سے پولیس میں شکایت درج کرانے پر گرفتار کرلیا گیا ہے اور ان پر بچوں سے زیادتی کا قانون لاگو کیا گیا ہے۔گرفتارخاتون کا کہنا تھا کہ ان کے تعلقات رضامندی سے قائم تھے اور ان کے شوہر کے نابالغ ہونے کو بھی مسترد کردیا۔پولیس نے ان کے خلاف بچوں کی شادی کے حوالے سے موجود قانون کی شق بھی لاگو کردی ہے۔بی بی سی کی رپورٹر گیتا پانڈے کا کہنا تھا کہ یہ ایک منفرد کیس ہے جہاں ایک خاتون کو نابالغ سے شادی کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے تاہم نابالغ لڑکے کی مرضی سے جنسی تعلقات قائم کرنے کے مقدمات درج ہوتے رہے ہیں۔بھارتی اخبارات کی رپورٹس کے مطابق گرفتار جوڑے کی شادی 8 نومبر 2017 کو ہوئی تھی جس کے بعد لڑکے کی والدہ نے پولیس میں شکایت درج کرادی تھی۔ممبئی پولیس کا کہنا تھا کہ لڑکے کی والدہ نے گزشتہ برس دسمبر میں خاتون پر ان کے بیٹے کو اغوا کرنے اور جبری شادی کرنے کے الزام عائد کرتے ہوئے شکایت درج کرا دی تھی۔ان کا کہنا تھا کہ پولیس نے مکمل انکوائری کے بعد انہیں گرفتار کیا ہے اور قانون مشورہ بھی لے رہے ہیں کیونکہ ملزم ایک خاتون ہیں۔شکایت میں لڑکے کی والدہ نے کہا ہے کہ ان کا بیٹا اس خاتون سے 2 سال سے رابطے میں تھا اور مذکورہ خاتون نے نہیں ملنے کی صورت میں انہیں جان سے مارنے کی دھمکی دی تھی۔بھارتی میڈیا کے مطابق گرفتار خاتون نے اپنے وکیل خالد اعظمی کے توسط سے ضمانت پر رہائی کے لیے درخواست دائر کردی ہے۔درخواست میں انہوں نے دعویٰ کیا ہے کہ ان کے شوہر کی عمر 18 سال سے زیادہ ہے اور ان کے تعلقات باہمی رضامندی سے قائم ہوئے تھے۔ان کا کہنا تھا کہ لڑکے کی 2 بہنیں ہیں جن کی عمریں 20 اور 18 سال ہے جبکہ ان کی والدہ کا دعویٰ ہے کہ ان کے بیٹے کی عمر 17 سال 8 ماہ ہے جو ممکن نہیں ہے

مزید خبر یں

جکارتہ (نیوز ڈیسک)انڈونیشیا کے جزیرے پاپوا پر سیلابی ریلوں کی تباہ کاریوں سے ہلاکتوں کی تعداد 77 ہو گئی۔تین درجن سے زائد افراد تاحال لاپتہ ہیں، سینکڑوں زخمی افراد کو طبی امداد دی جارہی ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق انڈونیشن ڈیزاسٹر ایجنسی نے ایک بیان میں کہاکہ جزیرے ... تفصیل

جکارتہ (نیوز ڈیسک)انڈونیشیا کے صوبے پاپوا میں شدید بارشوں اور سیلاب کے نتیجے میں50افراد ہلاک جبکہ 59 ز خمی ہو گئے۔سیلاب سے متاثرہ 120 سے زائد افراد سرکاری دفتر میں عارضی پناہ لئے ہوئے ہیں جبکہ حکام نے ہلاکتوں میں مزید اضافے کا خدشہ ظاہر کیا ... تفصیل

کینبرا(نیوز ڈیسک)آسٹریلوی وزیر اعظم نے مسلمان مخالف سینیٹر کو انڈا مارنے والے لڑکے کی حمایت کرتے ہوئے تجویز دی ہے کہ انڈا مارنے والے لڑکے پر تشدد کرنے پر سینیٹر کے خلاف مقدمہ درج کیا جانا چاہیے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق وزیر ... تفصیل