وزیراعظم کا 27 مارچ سے غربت کے خاتمے سے متعلق جامع پروگرام شروع کرنے کا اعلان              سونے کی قیمت ملکی بلند ترین سطح پر ،مقامی صرافہ مارکیٹوں میں فی تولہ 70ہزار 500روپے              آصف زرداری کی بریت کے خلاف نیب کی درخواست سماعت کے لئے مقرر              ڈاکٹر سعید کے بیرون ملک جانے پر پابندی ختم              اسد منیر مبینہ خودکشی ،چیئر مین نیب کا انکوائر ی خود کر نے کا فیصلہ              چین سے 2ارب ڈالر پاکستان کو موصول ہو گئے              نقیب اﷲقتل کیس میں راﺅ انوار سمیت دیگر ملزمان پر فرد جر م عائد              نوازشریف کی میڈیکل رپورٹ نارمل، پنجاب حکومت کو بھجوادی              کرائسٹ چرچ واقعہ: جیسنڈا آرڈرن کا حملے کی تحقیقات کے لیے رائل کمیشن بنانے کا اعلان       
تازہ تر ین

جس کپتان کے پیچھے دنیا وہ عثمان بزدار کے پیچھے کیوں ؟ بالآخر اصل کہانی منظر عام پر آگئی

اسلام آباد(نیو زڈیسک)معروف صحافی ارشاد بھٹی کا کہنا ہے کہ میں نے عثمان بزدار سے پوچھنا ہے کہ آخر انہوں نے وزیراعظم کو کیا گھول کر پلایا ہے اور ان پر ایسا کیا جادو ٹونا کیا ہے وہ کپتان جس کے پیچھے دنیا رل رہی ہے وہ عثمان بزدار کے پیچھے ہے۔اللہ عثمان بزدار کو خوش رکھے لیکن ان کو وقت ملے تو وہ مجھے ضرور بتائیں کہ آخر کیا وجہ ہے کہ عمران خان عثمان بزدار کی اتنی حمایت کرتے ہیں۔واضح رہے عثمان بزدار کے بارے میں پہلے صحافیوں کی رائے اچھی نہیں تھی اور سیاسی مبصرین کا کہنا تھا کہ ایک نا تجربہ کار شخص اتنا بڑا صوبہ سنبھالنے کا اہل نہیں ہے ۔کئی صحافیوں کی جانب سے عثمان بزدار پر تنقید کی جاتی ہے۔معروف صحافی کامران شاہد نے کہا تھا کہ ہےعمران خان نے جتنی تعریفوں کے پل عثمان بزدار کے باندھے اتنے آج تک کسی کے نہیں باندھے، جو عمران خان نے فرمایا اسے سن کر آنکھیں اور عقل دنگ رہ گئیں۔مجھے نہیں یاد پڑتا کہ عمران خان نے اتنی تعریفیں کبھی شاہ محمود قریشی یا کسی اور بڑے پارٹی لیڈر کی کیں ہوں۔ لیکن عمران خان جیسے شخص نے جب عثمان بزدار کی قائدانہ صلاحیتوں سے متعلق سب کو بتایا تو ہر کسی کی آنکھ میں آنسو آ گئے،کامران شاہد کا کہنا تھا کہ جب سپریم کورٹ نے ڈی پی او پاکپتن تبادلہ کیس میں عثمان بزدار کو بلایا تو اس وقت وزیراعلیٰ پنجاب پسینے سے شرابور ہو کرعدالت سے باہر آئے۔عمران خان نے کہا تھا کہ عثمان بزدار ٹیم لیڈر ہیں لیکن اب تک پنجاب میں جتنے بھی فیصلے ہوئے وہ عثمان بزدار کے علاوہ سب نے کیے۔ جو فیصلے پنجاب کے عثمان بزدار نے کرنے تھے وہی فیصلے عمران خان کر رہے ہیں۔اور وزیراعظم عمران خان شہر اقتدار سے اپنی تمام تر مصروفیات چھوڑ کر لاہورآئے اور انہوں نے وہ اعلانات کیے جو دراصل وزیر اعلی پنجاب کا کام ہوتا ہے۔عمران خان نے کہا آئندہ 48گھنٹوں میں نئے بلدیاتی نظام کو حتمی شکل دی جائے گی۔ایل ڈی اے پلازہ سمیت جہاں بھی سرکاری ریکارڈ جلا اس کی تحقیقات کے لیے جے آئی ٹی بنائی جائے گی۔ صوبے کے تمام بڑے منصوبوں کا آڈٹ کروایا جائے گا،وزراء کے لیے کوئی چھٹی نہیں ہے۔اس کے علاوہ صحت و انصاف کارڈ سمیت کئی ایسے فیصلے ہیں جو وزیر اعلی پنجاب کی بجائے عمران خان نے کیے ہیں

مزید خبر یں

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)وزیر اعظم عمران خان نے نئے لوکل نظام کو آئندہ ایک ماہ میں تمام ضروری مراحل مکمل کرکے نافذ العمل کرنیکی ہدایت کرتے ہوئے کہاہے کہ ماضی میں خیبر پختونخواہ میں ویلیج کونسلز کے قیام کا تجربہ بہت کامیاب رہا،اس نظام کو مزید ... تفصیل

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)وزیر مملکت برائے داخلہ شہر یار آفریدی نے نادر اپاسپورٹ اور امیگریشن ڈیپارٹمنٹس کو شمالی اور جنوبی وزیرستان میں موبائیل دفاترقائم کرنے کی ہداہت کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیرستان کی عوام کے مسائل بلاتفریق حل کیے جائیں گئے،وفاقی حکومت وزیرستان کے عوام ... تفصیل

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) سیکرٹری جنرل پیپلز پارٹی نیر بخاری نے کہاہے کہ بلاول بھٹو زرداری کو نیب کے ذریعے خوفزدہ نہیں کیا جا سکتا ۔ ایک بیان میں نیر بخاری نے عمران خان کے بیان رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ بلاول بھٹو زرداری ... تفصیل