محکمہ داخلہ نے مریم نواز ،ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان کو نواز شریف سے ملاقات کی اجازت دیدی              یوم پاکستان پریڈ ،چار گھنٹے کیلئے اسلام آباد کی فضائی حدود بند کرنے کا فیصلہ              ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان کو قدرتی آفات سے بچاوکیلئے 15 کروڑ روپے کی گرانٹ فراہم کردی              بلاول بھٹو کوغداروطن قراردینے کے مطالبے کی قرارداد جمع              مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی فائرنگ سے بچے سمیت 7 کشمیری شہید              مريم نواز کی کل جيل کے باہر دھرنا دينے کی دھمکی              کر اچی:مفتی تقی عثمانی کے قافلے پر فائرنگ ،2افراد جاں بحق              پاکستان پیپلز پارٹی کا نیشنل ایکشن پلان پر حکومتی بریفنگ کے بائیکاٹ کا فیصلہ              اٹک میں گھر کی چھت گرنے سے 6افراد جا ں بحق       
تازہ تر ین

نواز ،زرداری کے جیل جانے کی صورت میں عمران خان کو کیا فائدہ ہوگا؟ ایسی خبر جا ن کرآپ یقین نہیں کرینگے

اسلام آباد(نیوزڈیسک)اس وقت پاکستان مسلم لیگ ن کے قائد میاں محمد نواز شریف اور پاکستان پیپلز پارٹی کے صدر آصف علی زردرای پر مشکل وقت گزر رہا ہے۔ممکنہ طور پر اس سال کا آخر دونوں پر بھاری گزرے گا لیکن اصل قابل غور بات یہ ہے کہ تحریک انصاف جو کہ موجودہ حکومت میں بھی ہے وہ اس تمام صورتحال سے کیسے فائدہ اٹھائے گی۔اسی حوالے سے تجزیہ پیش کرتے ہوئے معروف صحافی سہیل وڑائچ کا کہنا تھا کہ پہلے چھ ماہ تو عمران خان کے فائدے میں رہیں گے کیونکہ وہ اپوزیشن کو ایک طرح سے بلکل بلڈوز کر دیں گے۔اگر نواز شریف اور آصف علی زرداری دونوں جیل چلے جاتے ہیں تو یوں سمجھیں کہ ملک اپوزیشن سے خالی ہو جائے گا اور اس میں اکیلے عمران خان ہوں گے لیکن ایسا صرف چھ ماہ ہی ہو گا۔عمران خان کو چھ ماہ فری ہینڈ دیا جا رہا ہے یا پھر وہ لے رہے ہیں لیکن اس کے بعد عام آدمی کا برداشت کا لیول کم ہوتا ہے اور ساری ذمہ داری عمران خان پر عائد ہو گی کیونکہ ابھی تو حکومت ناکامی کا سارا ملبہ گذشتہ حکومتوں پر گراتی ہے تاہم بعد میں ایسا نہیں چلے گا کیونکہ دونوں جماعتوں کے لیڈر جیل میں ہوں گے اور ایسی صورت میں عمران خان کو پرفارمنس دکھانی پڑے گی۔خیال رہے اس وقت پاکستان کی دو بڑی سیاسی جماعتیں پاکستان مسلم لیگ ن اور پاکستان پیپلز پارٹی مشکل وقت سے گزر رہی ہے۔دونوں جماعتوں کے لیڈروں کو اپنے خلاف کرپشن سے متعلق کیسز میں تحقیقات کا سامنا ہے۔سیاسی مبصرین کے مطابق اب مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف جبکہ پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری کا بچنا مشکل ہو گیا ہے۔ جبکہ مسلم لیگ ن کے صدر اور اپوزیشن لیڈر شہباز شریف پہلے ہی جیل میں ہیں۔ماضی میں ایک دوسرے کے خلاف نعرے لگانے والے اور دوسرے کا پیٹ نکال کر پیسے نکالنے کی باتیں کرنے والے سیاسی رہنماؤں نے بھی اب ہاتھ ملا لیا ہے تاہم آگے کیا ہو گا یہ وقت ہی بتائے گا۔

مزید خبر یں

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے اپنے ملائیشین ہم منصب ڈاکٹر مہاتیر محمد کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ مہاتیر محمد وہ بات کہہ دیتے ہیں جو دیگر مسلمان لیڈر کہنے سے ڈرتے ہیں۔پاکستان ملائیشیا سرمایہ کاری سے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ... تفصیل

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد کو پاکستان کے اعلیٰ ترین سول ایوارڈ ’نشان پاکستان‘ سے نواز ا۔ ایوان صدر میں ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد کے اعزاز میں عشایئے کی تقریب کا انعقاد کیا گیا ۔ ... تفصیل

لاہور( نیوز ڈیسک) مسلم لیگ (ن) کی مرکزی رہنما مریم نواز کی جانب سے اپنے والد سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف کی صحت کے حوالے سے تشویش کا اظہار کرنے اور ملاقات کی اجازت ملنے تک جیل کے باہر رہنے کے بیان کے بعد محکمہ ... تفصیل