نوید کامران بلوچ نئے سیکرٹری خزانہ تعینات              وفاق نے کراچی کے تین بڑے ہسپتالوں کا کنٹرول سنبھال لیا              بھارتی انتخابات میں مودی کی جماعت بی جے پی نے کامیابی حاصل کرلی              محکمہ موسمیات نے شہرقائد میں ہیٹ ویوالرٹ جاری کردیا              وفاقی سیکرٹری خزانہ یونس ڈھاگہ کو عہدے سے ہٹا دیا گیا              پاکستان کا زمین سے زمین پر مار کرنے والے بیلسٹک میزائل ’شاہین 2‘ کا کامیاب تجربہ              وزیراعظم عمران خان کا نئی پیٹرولیم پالیسی تشکیل دینے کا اعلان              پاکستان مخالف تقاریر کا الزام: سماجی رضا کار گلا لئی اسماعیل کے خلاف مقدمہ       
تازہ تر ین

امیرمقام کے بیٹے کی گرفتاری کو سیاسی انتقام نہ کہیں تو اور کیا کہیں ؟ شاہد خاقان عباسی کی گرفتار ی کی مذمت

shahid khaqan abbasi

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے پاکستان مسلم لیگ (ن)خیبر پختون خوا کے صدر امیر مقام کے بیٹے کی گرفتاری کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسے سیاسی انتقام نہ کہیں تو اور کیا کہیں؟اگر حکومت ناکام ہوگئی ہے تو ہمارا کوئی قصور نہیں۔پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہاکہ امیر مقام کو ایک مقدمہ میں ملوث کرنے کی کوشش کی گئی انکے بیٹے کو گرفتار کیا گیا۔ انہوں نے کہاکہ نہ کسی نے شکایت کی جس ادارے نے کام کروایا نہ اس نے کوئی شکایت کی۔سابق وزیر اعظم نے کہاکہ این ایچ اے نے بھی کام معیاری نہ ہونے کی کوئی شکایت کی ہے،پرچہ میں جو الزام لگا وہ 3 کروڑ سے بھی کم ہے۔ انہوں نے کہاکہ امیر مقام کے بیٹے کی کمپنی کی 35 کروڑ کی بینک گارنٹیاں این ایچ اے کو دی گئی ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ اگر کوئی کام غلط ہوا تھا تو اس پر کبھی کوئی شکایت تو ہوتی۔انہوں نے کہاکہ 30 نومبر 2018 کو وزارت مواصلات کے جوائنٹ سیکرٹری نے ایف آئی اے کو خط لکھا،خط وزیر کے حکم پر لکھا گیا کہ اس منصوبے میں کرپشن ہے،یہ کیفیت ہے اس کیس کی اگر اسے سیاسی انتقام نہ کہیں تو اور کیا کہیں؟اگر حکومت ناکام ہوگئی ہے تو ہمارا کوئی قصور نہیں۔انہوں نے کہاکہ ایف آئی اے نے نمونے لیے،14 نمونے درست ،دو بہتر اور دو میں کچھ کمی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹھیکے کے مطابق یہ کمی محکمے کو ایک سال میں دور کرانی چاہیے تھی،یہ ٹھیکہ 2009 میں دیا گیا تھا ہماری حکومت کا ٹھیکہ نہیں ہے،2015 میں کام مکمل ہوا سڑک چل رہی ہے ۔انہوں نے کہاکہ شکایت صرف وزیر کو ہے ،اگر حکومت نے یہ کھیل کھیلنا ہے تو پھر وہ بھی تیار ہوجائے۔ انہوں نے کہاکہ ملک میں سیاسی انتقام میں نئے باب کا اضافہ ہوا ہے،نیب کے بعد اب ایف آئی اے بھی سیاسی انتقام کے میدان میں اتری ہے۔ انہوں نے کہاکہ اداروں کو سیاسی انتقام کے لیے استعمال کیا جا رہا ہے،حکومت اور اداروں کو جہاں کرپشن ہے وہاں نظر نہیں آ رہی۔ انہوںنے کہاکہ اگر کسی منصوبے میں کرپشن ہے تو وہ بی آر ٹی میں ہے۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان کی کرپشن حلال ہے اور کسی اور کی غلطی بھی معاف نہیں۔انہوں نے کہاکہ پشاور میٹرو کو 4 سال ہوگئے اس میں کیا کرپشن ہوئی انہیں معلوم ،ہم خود کرپشن کے خلاف ہیں جتنی کرپشن پشاور میٹرو میں ہے کسی منصوبے میں نہیں۔انہوں نے کہاکہ ہم نے جو ایمنسٹی اسکیم دی وہ بری تھی آج جو دی وہ ٹھیک ہے؟،ٹیکس چوروں کو چھٹی دیدی گئی ہے۔انہوں نے کہاکہ پارلیمنٹ میں ہماری مکمل زبان بندی ہے۔انہوں نے کہاکہ عمران خان صاحب، وزیر خزانہ ایوان میں آنا پسند نہیں کرتے ۔ سابق وزیر اعظم نے کہاکہ عمران خان کے وزیر سیاسی انتقام کی کارروائیوں میں مصروف ہے ،سیاسی انتقام کی کارروائیوں پر ہم مذمت کرتے ہے ۔ انہوں نے کہاکہ وزارت داخلہ کے ادارے بھی سیاسی انتقام پر کارروائیاں کر رہی ہے۔شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ ہم نے قومی اسمبلی کے اجلاس کیلے ریکوزیشن جمع کروا دی ہے ،ملک میں دہشت گردی کی لہر اور آئی ایم ایف کے ساتھ معاہدے پر بحث کرائی جائے ۔ انہوں نے کہاکہ حالیہ دہشت گردی کے واقعات میں اضافہ ہونا تشویشناک ہے۔انہوں نے کہاکہ ملکی حالات کو مدد نظر رکھتے ہوئے قومی اسمبلی کا اجلاس (کل) بدھ کو ہی بلا لینا چاہیے۔

مزید خبر یں

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) وزیر اعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان بھارتی عوام کا مینڈیٹ تسلیم کر کے مودی کے ساتھ بات چیت کےلئے تیار ہے ،بھارت ہمیشہ مذاکرات سے کترارتا رہا ہے ،مسئلہ ... تفصیل

کراچی(نیوز ڈیسک) شہر قائد میں گرمی کی نئی لہر کے پیش نظر محکمہ موسمیات نے نیا ہیٹ ویو الرٹ جاری کردیا ہے۔کراچی میں گزشتہ چند روز سے دن کے اوقات میں سمندر سے چلنے والی ہوائیں بند ہوجاتی ہیں جس کی وجہ سے گرمی کی شدت ... تفصیل

لاہور(نیوز ڈیسک ) گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا ہے کہ اپوزیشن کے احتجاج میں رکاوٹیں نہیں ڈالیں گے مگر عوام انکے نہیں تحر یک انصاف کیساتھ ہیں ،اپوزیشن جماعتیں کسی نظر یے یا ملک وقوم کیلئے نہیں اپنے مفادات کے تحفظ کیلئے جمع ہو ... تفصیل