حکومت کا سینیٹ انتخابات میں ہارس ٹریڈنگ کے خاتمے کیلئے اوپن بیلٹ کا فیصلہ
جی 20 سے پاکستان کو قرضوں کی ادائیگی میں 2 ارب ڈالر سے زائد ریلیف ملنے کا امکان
سعودی عرب میں کوڑے مارنے کی سزا کو باضابطہ ختم کردیا گیا
سٹیزن پورٹل سے شہری غیر مطمئن، وزیراعظم کا اداروں کیخلاف تحقیقات کا حکم
کورونا نے پی ٹی آئی کی رکن اسمبلی شاہین رضا کی جان لے لی
ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان کو کورونا وباء سے بچاؤ کیلئے 30 کروڑ ڈالر کا قرض فراہم کر دیا
حکومت بلوچستان نے اسمارٹ لاک ڈاؤن میں 2 جون تک توسیع کردی
پاکستان میں 2 ماہ بعد ریلوے آپریشن بحال کر دیا گیا
کرونا وبا،ملک میں 1ہزار سے زائد اموات،مریضو ں کی تعداد47ہزار سے تجاوز کر گئی،13ہزار سے زائدصحتیاب
تازہ تر ین

انضمام شدہ علاقوں کی تعمیر و ترقی  انکو ملک کے دیگر حصوں کے برابر لانا اولین ترجیح ہے،وزیر اعظم

اسلام آباد (نیوزڈیسک) وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ انضمام شدہ علاقوں کی عوام انتہائی باشعور ہے، انضمام شدہ علاقوں کی تعمیر و ترقی اور انکو ملک کے دیگر حصوں کے برابر لانا حکومت کی اولین ترجیح ہے،حکومت کو اس امر کا مکمل ادراک ہے کہ بعض بیرونی عناصر ان علاقوں میں انتشار پھیلانے کی کوشش کر رہے ہیں، ہم نے عوام کے ساتھ مل کر ایسے بیرونی عناصر کی سازشوں کو ناکام بنانا ہے،اس کے لئے ضروری ہے کہ ترقیاتی منصوبوں اور مسائل کے حل کے سلسلے میں کی جانے والی کوششوں سے انضمام شدہ علاقوں کی عوام کو مکمل طور پر باخبر رکھا جائے اور انہیں اس پورے عمل میں ہر طرح سے شریک بنایا جائے،مالاکنڈ -تھری ہائیڈرو پاور پراجیکٹ اور پیہور ہائیڈروپاورپراجیکٹ کے واجبات کی ادائیگیوں، مچھائی ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے معاملے اور پیڈو منصوبوں پر انکم ٹیکس کی رعایت دیے جانے کے معاملے پر وزیراعظم نے وزارتِ توانائی کو ہدایت کی کہ صوبائی حکومت سے مل کر ان معاملات کو حل کیا جائے۔ وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت صوبہ خیبر پختونخواہ میں توانائی، ہائر ایجوکیشن، صحت، ترقیاتی منصوبوں سے متعلق معاملات اور خصوصاً انضمام شدہ علاقوں میں ترقیاتی منصوبوں کی رفتار کا جائزہ ا جلاس ہوا اجلاس میں وزیر برائے توانائی عمر ایوب، وزیرِ اعلیٰ خیبرپختونخواہ محمود خان، معاون خصوصی ندیم بابر، صوبائی وزیرِ خزانہ خیبر پختونخواہ تیمور سلیم خان جھگڑا، وفاقی سیکرٹری خزانہ، سیکرٹری منصوبہ بندی، چیف سیکرٹری خیبر پختونخواہ، چئیرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن طارق بنوری و دیگر سینئر افسران شریک ہوئے ۔اجلاس میں انضمام شدہ علاقوں میں ترقیاتی منصوبوں پر عمل درآمد اور اب تک کی پیش رفت کا جائزہ لیا گیا ۔ وزیرِ اعظم کو بتایا گیا کہ انضمام شدہ علاقوں میں ترقیاتی منصوبوں کی بلا تعطل پیش رفت کو یقینی بنانے کے لئے وزارتِ خزانہ سے مطلوبہ فنڈز کی فراہمی کو یقینی بنایا گیا ہے۔ وفاقی حکومت انضمام شدہ علاقوں میں ترقیاتی منصوبوں پر عمل درآمد کو مزید تیز کرنے کے لئے فنڈزکی فوری فراہمی کے لئے پر عزم ہے۔ انضمام شدہ علاقوں کی عوام کو بجلی کی بلاتعطل فراہمی کے ضمن میں کی جانے والی کوششوں کے حوالے سے وزیرِ اعظم کو بتایا گیا ہے کہ ان علاقوں میں ٹرانسمیشن کے کمزور انفراسٹرکچر کو مضبوط کرنے کے حوالے سے وزارتِ توانائی خصوصی توجہ دے رہی ہے۔ وزیراعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ انضمام شدہ علاقوں کی عوام انتہائی باشعور ہے۔ انہوں نے کہا کہ انضمام شدہ علاقوں کی تعمیر و ترقی اور انکو ملک کے دیگر حصوں کے برابر لانا حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ وزیرِ اعظم نے کہا کہ حکومت کو اس امر کا مکمل ادراک ہے کہ بعض بیرونی عناصر ان علاقوں میں انتشار پھیلانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے عوام کے ساتھ مل کر ایسے بیرونی عناصر کی سازشوں کو ناکام بنانا ہے۔ اس کے لئے ضروری ہے کہ ترقیاتی منصوبوں اور مسائل کے حل کے سلسلے میں کی جانے والی کوششوں سے انضمام شدہ علاقوں کی عوام کو مکمل طور پر باخبر رکھا جائے اور انہیں اس پورے عمل میں ہر طرح سے شریک بنایا جائے۔ وزیر اعظم نے کہاکہ مالاکنڈ -تھری ہائیڈرو پاور پراجیکٹ اور پیہور ہائیڈروپاورپراجیکٹ کے واجبات کی ادائیگیوں، مچھائی ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے معاملے اور پیڈو منصوبوں پر انکم ٹیکس کی رعایت دیے جانے کے معاملے پر وزیراعظم نے وزارتِ توانائی کو ہدایت کی کہ صوبائی حکومت سے مل کر ان معاملات کو حل کیا جائے۔ اجلاس میں صوبہ خیبر پختونخواہ میں واقع یونیورسٹیوں کی مالی ضروریات پر بھی تفصیلی بریفنگ۔ چئیرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن طارق بنوری نے یونیورسٹیوں کے مالی معاملات اور ضروریات اور ان معاملات کو منظم کرنے کے حوالے سے ہائر ایجوکیشن کمیشن کی جانب سے مرتب کی جانے والی حکمت عملی کے بارے میں وزیرِ اعظم کو تفصیلی طور پر آگاہ کیا۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیاکہ اس سلسلے میں تفصیلی اجلاس آئندہ چند روز میں منعقد کیا جائے گا تاکہ ہائر ایجوکیشن کمیشن کی جانب سے مرتب کی جانے والی حکمت عملی کو حتمی شکل دی جا سکے۔ وزیرِ اعظم نے کہا کہ تعلیم اور خصوصاً ہائر ایجوکیشن میں سرمایہ کاری حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ اس سلسلے میں حکومت ہر ممکنہ کوشش کرے گی کہ تعلیمی اداروں کی جائز ضروریات کو پورا کیا جا سکے۔

مزید خبر یں

اسلام آباد (نیوزڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ یورپ، امریکا اور چین کے مقابلے میں ہمیں کورونا کے ساتھ غربت کا بھی سامنا ہے، معاشی بہتری کیلئے مشکل فیصلے کیے تاہم وبا کی وجہ سے توازن نہیں رہا،ہمیں کرنٹ خسارے سمیت مالی خسارے کا سامنا ... تفصیل

اسلام آباد (نیوزڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ صحت کے شعبے پر توجہ نہ دینے کے باعث کورونا کی وبا ہمارے لیے بڑا چیلنج ہے، ویکسین بننے تک ہمیں کورونا کے ساتھ ہی گزارا کرنا ہوگا،کورونا وائرس کا حقیقی حل ویکسین ہی ہے، صحت کے ... تفصیل

اسلام آباد (نیوزڈیسک)تحریک انصاف کی حکومت نے سینیٹ کے انتخابات میں ہارس ٹریڈنگ کے خاتمے کے لیے وزیر اعظم کے انتخاب کی طرز پر اوپن بیلٹ کے ذریعے سینیٹ چیئرمین کے انتخابات کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود اور وفاقی ویزر برائے نارکوٹکس ... تفصیل