ایشیائی ترقیاتی بینک نے سال 2019 میں پاکستان کو 2 ارب 40 کروڑ ڈالر کا ریکارڈ قرض دیا
اسلام آباد ہائیکورٹ،پرویز مشرف کےخلاف فیصلہ سنانےوالے جسٹس وقار سیٹھ کےخلاف ریفرنس دائر کرنے کےلئے درخواست دائر
سپریم کورٹ،ڈپٹی سپیکر قاسم سوری کے حلقے میں دوبارہ انتخابات کے حکم کیخلاف اپیل سماعت کیلئے مقرر ،بینچ 25 فروری کو سماعت کرے گا
وفاقی حکومت نے بیرسٹر خالد جاوید کی بطور اٹارنی جنرل تعیناتی کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا
صدر مملکت کاپشاور زلمی کے کپتان ڈیرن سیمی کو اعزازی شہریت اور اعلی ترین سول ایوارڈ کا اعلان
ایف اے ٹی ایف کا پاکستان کو مزید 4 ماہ گرے لسٹ میں برقرار رکھنے کا فیصلہ
تازہ تر ین

بھارت کا پاکستان میں کبڈی ورلڈ کپ میں حصہ لینے والی اپنی ٹیم سے اظہار لاتعلقی

نئی دہلی (نیوزڈیسک) بھارتی حکام نے کبڈی ورلڈ کپ میں حصہ لینے کے لیے پاکستانی آنے والی اپنی ٹیم سے لاتعلقی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان میں ہونے والے ٹورنامنٹ کے لیے کسی ٹیم کو اجازت نہیں دی گئی۔بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق انڈین اولمپک ایسوسی ایشن (آئی او اے) کے سربراہ نریندر باترا نے کہاکہ پاکستان گئے ہوئے کسی کھلاڑی کے بارے میں انہیں کوئی علم نہیں، اسی طرح نہ آئی او اے اور نہ ہی امیچور کبڈی فیڈریشن آف انڈیا (اے کے ایف آئی) نے کسی ٹیم کو ورلڈ کپ میں حصہ لینے کی منظوری دی۔انہوں نے کہا کہ آئی او اے نے کوئی منظوری نہیں دی اور فیڈریشن کی جانب سے بھی منظوری نہیں دی گئی اس لیے میں نہیں جانتا کہ کون گیا ہوا ہے اور 60 یا 100 کتنے ہیں مجھے اندازہ نہیں۔نریندر باترا کا کہنا تھا کہ آئی او اے رکن کبڈی فیڈریشن نے تصدیق کی ہے کہ انہوں نے کسی نہیں بھیجا اور وزارت کھیل کا بیان بھی میں نے دیکھا ہے اور انہوں نے بھی کوئی منظوری نہیں دی تو میں نہیں جانتا کہ وہ کون ہیں اور کہانی کیا ہے۔رپورٹ کے مطابق اے کے ایف آئی کے منتظم ایس پی گیرج نے بھی تصدیق کردی کہ فیڈریشن نے پاکستان میں کبڈی ورلڈ کپ میں حصہ لینے کےلئے کسی ٹیم کو اجازت نہیں دی اور حکام نے انکشاف کیا کہ کھلاڑی بھارت سے صرف معلومات ملنے پر چلے گئے ہیں۔خیال رہے کہ بھارت کی کبڈی ٹیم 8 فروری کو براستہ واہگہ بارڈر لاہور پہنچی تھی اور کبڈی ورلڈ کپ 2020میں حصہ لینے والی 10 ٹیموں میں شامل ہے تاہم بھارتی حکام کے ان بیانات سے نئی بحث چھڑ گئی ہے۔رپورٹ کے مطابق عالمی مقابلوں میں حصہ لینے والی بھارتی ٹیم کے لیے متعلقہ کھیل کی وزارت کو آگاہ کرنا ضروری ہوتا ہے جو منظوری کے لیے درخواست کو وزارت خارجہ امور اور وزارت داخلہ کو بھیج دیتی ہے چاہے اس ٹیم کی فنڈنگ سرکاری سطح پر ہو یا نہیں۔

مزید خبر یں

لاہور( نیوزڈیسک) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی میں کلیدی کردار اور پاکستان سے محبت کے اعتراف میں پشاور زلمی کے کپتان ڈیرن سیمی کے لیے اعزازی شہریت اور اعلی ترین سول ایوارڈ کا اعلان کردیا ۔ یہ ... تفصیل

کراچی (نیوزڈیسک) کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے نوجوان بلے باز اعظم خان نے پورے سیزن میں عمدہ کارکردگی کا عزم ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں اپنے بلے سے ناقدین کو جواب دینے کی کوشش کروں گا۔پاکستان سپر لیگ کے پانچویں ایڈیشن کے افتتاحی میچ میں ... تفصیل

ولنگٹن (نیوز ڈیسک) نیوزی لینڈ کے بیٹسمین راس ٹیلر کرکٹ کے تینوں فارمیٹ میں 100 میچز کھیلنے والے پہلے کھلاڑی بن گئے۔راس ٹیلر نے یہ اعزاز انڈیا کےخلاف کھیلے گئے پہلے ٹیسٹ کے موقع پر حاصل کیا۔اس موقع پر راس ٹیلر میدان میں اپنے بچوں کے ... تفصیل